(سورۃ ٱلتِّين (مکی، آیات 8

بِسۡمِ اللّٰہِ الرَّحۡمٰنِ الرَّحِیۡمِ


بنام خدائے رحمن رحیم


1وَ التِّیۡنِ وَ الزَّیۡتُوۡنِ ۙ 515

1۔قسم ہے انجیر اور زیتون کی



1وَ طُوۡرِ سِیۡنِیۡنَ ۙ 525

2۔ اور طور سینین کی۔



1وَ ہٰذَا الۡبَلَدِ الۡاَمِیۡنِ ۙ 535

3۔ اور اس امن والے شہر کی



1لَقَدۡ خَلَقۡنَا الۡاِنۡسَانَ فِیۡۤ اَحۡسَنِ تَقۡوِیۡمٍ ۫ 545

4۔بتحقیق ہم نے انسان کو بہترین اعتدال میں پیدا کیا،



1ثُمَّ رَدَدۡنٰہُ اَسۡفَلَ سٰفِلِیۡنَ ۙ 555

5۔ پھر ہم نے اسے پست ترین حالت کی طرف پلٹا دیا۔



1اِلَّا الَّذِیۡنَ اٰمَنُوۡا وَ عَمِلُوا الصّٰلِحٰتِ فَلَہُمۡ اَجۡرٌ غَیۡرُ مَمۡنُوۡنٍ ؕ 565

6۔ سوائے ان لوگوں کے جو ایمان لائے اور نیک عمل کرتے رہے، پس ان کے لیے بے انتہا اجر ہے۔



1فَمَا یُکَذِّبُکَ بَعۡدُ بِالدِّیۡنِ ؕ 575

7۔ پس اس کے بعد روز جزا کے بارے میں کون سی چیز تجھے جھٹلانے پر آمادہ کرتی ہے ۔



1اَلَیۡسَ اللّٰہُ بِاَحۡکَمِ الۡحٰکِمِیۡنَ 585

8۔ کیا اللہ حاکموں میں سب سے بڑا حاکم نہیں ہے؟