(سورۃ ٱلْعَادِيَات (مکی، آیات 11

بِسۡمِ اللّٰہِ الرَّحۡمٰنِ الرَّحِیۡمِ


بنام خدائے رحمن رحیم


1وَ الۡعٰدِیٰتِ ضَبۡحًا ۙ 515

1۔ قسم ہے ان (گھوڑوں) کی جو ہانپتے ہوئے دوڑتے ہیں،



1فَالۡمُوۡرِیٰتِ قَدۡحًا ۙ 525

2۔ پھر (اپنی) ٹھوکروں سے چنگاریاں اڑاتے ہیں،



1فَالۡمُغِیۡرٰتِ صُبۡحًا ۙ 535

3۔ پھر صبح سویرے دھاوا بولتے ہیں،



1فَاَثَرۡنَ بِہٖ نَقۡعًا ۙ 545

4۔ پھر اس سے غبار اڑاتے ہیں،



1فَوَسَطۡنَ بِہٖ جَمۡعًا ۙ 555

5۔ پھر انبوہ (لشکر) میں گھس جاتے ہیں،



1اِنَّ الۡاِنۡسَانَ لِرَبِّہٖ لَکَنُوۡدٌ ۚ 565

6۔ یقینا انسان اپنے رب کا ناشکرا ہے۔



1وَ اِنَّہٗ عَلٰی ذٰلِکَ لَشَہِیۡدٌ ۚ 575

7۔اور وہ خود اس پر گواہ ہے۔



1وَ اِنَّہٗ لِحُبِّ الۡخَیۡرِ لَشَدِیۡدٌ ؕ 585

8۔ اور وہ مال کی محبت میں سخت ہے۔



1اَفَلَا یَعۡلَمُ اِذَا بُعۡثِرَ مَا فِی الۡقُبُوۡرِ ۙ 595

9۔ کیا اسے (وہ وقت) معلوم نہیں جب اٹھائے جائیں گے وہ جو قبروں میں ہیں؟



1وَ حُصِّلَ مَا فِی الصُّدُوۡرِ ۙ 5105

10۔ اور جو کچھ دلوں میں ہے اسے ظاہر کر دیا جائے گا؟